دوست کیا خوب وفاؤں کا صلہ دیتے ہیں

دوست کیا خوب وفاؤں کا صلہ دیتے ہیں ہر نئے موڑ پر ایک زخم نیا دیتے ہیں تم سے تو خیر گھڑی بھر کی ملاقات رہی لوگ صدیوں کی رفاقت کو بھلا دیتے ہیں کیسے ممکن ہے کہ دھواں بھی نہ ہو اور دل بھی جلے چوٹ

Read More

بھیگی تو نہیں شام ابھی

زندگی پاؤں نہ دَھر جانبِ انجام ابھی مرے ذمے ہیں ادُھورے سے کئی کام ابھی ابھی تازہ ہے بہت گھاؤ بچھڑ جانے کا گھیر لیتی ہے تری یاد سرِشام ابھی اِک نظر اور اِدھر دیکھ مسیحا میرے ترے بیمار کو آیا نہیں

Read More

بوجھل تھیں فضا کی سانسیں

رات سنسان تھی بوجھل تھیں فضا کی سانسیں روح پر چھائے تھے بے نام غموں کے سائے دل کو یہ ضد تھی کہ تو آئے تسلی دینے میری کوشش تھی کہ کمبخت کو نیند آ جائے دیر تک آنکھوں میں چبھتی رہی تاروں کی چمک دیر

Read More

اتنا آساں بھی نہیں تجھ سےمحبت کرنا

ضبط کرنا نہ کبھی ضبط میں وحشت کرنا اتنا آساں بھی نہیں تجھ سےمحبت کرنا تجھ سے کہنے کی کوئی بات نہ کرنا تجھ سے کنج تنہائی میں بس خود کو ملالت کرنا اک بگولے کی طرح ڈھونڈتے پھرنا تجھ کو روبرو ہو تو

Read More

اردو زبان اور آداب

ایک خاتون نے اردو زبان اور آداب سیکھنے کے لیے ایک استاد کی خدمات حاصل کیں۔ استاد نے کئی ماہ کی محنت کے بعد خاتون سے کہا کہ میں نے آپ کو جو تربیت دی ہے، کل اس کا امتحان ہوگا۔ میں نےایک معروف اہل

Read More

چلو اک بار پھر سے

ساحر لدھیانوی کے جب لتا منگیشکر کے ساتھ اختلافات ہو گئے تو ساحر نے ایک نئی گلوکارہ "سدھا ملہوترہ” کی طرف بڑھانا شروع کیا۔ اسی دوران "سدھا ملہوترہ” سے ان کے عشق کی داستانیں

Read More

ہر ظلم ترا یاد ہے

ہر ظلم ترا یاد ہے، بھولا تو نہیں ہوں اے وعدہ فراموش میں تجھ سا تو نہیں ہوں اے وقت مٹانا مجھے آسان نہیں ہے انساں ہوں کوئی نقش کفِ پا تو نہیں ہوں چپ چاپ سہی مصلحتاً وقت کے ہاتھوں مجبور سہی وقت سے

Read More

محبت روگ ھے جاناں

محبت روگ ھے جاناں عجب سنجوگ ھے جاناں یہ کیسا روگ ھے جاناں بڑے بوڑھے بتاتے تھے کئ قصے سناتے تھے مگر ھم مانتے کب تھے یہ سب کچھ جانتے کب تھے وہ باتیں ذکر کے قابل بھلا گردانتے کب تھے انا کے تخت پہ

Read More

پرانے دور میں

معصومیت بھرے پرانے دور میں *الماریوں میں اخبارات بھی انگریزی کے بچھائے جاتے* تھے کہ ان میں مقدس کتابوں کے حوالے نہیں ہوتے۔ چھوٹی سے چھوٹی کوتاہی پر بھی کوئی نہ کوئی *سنا سنایا خوف* آڑے آجاتا

Read More

تو چپ ہی رہنا

انسان کی یہ بشری کمزوری رہی ہے کہ وہ دوسرے انسان کو خود سے بہتر دیکھ کر ہمیشہ حسد میں مبتلا ہو جاتا ہے ۔اس لئے وہ کہیں نہ کہیں یہ چاہتا ہے کہ دوسرے کے عیب اور کمزوریاں اس کے علم میں ہوں تاکہ وہ

Read More